والدین کی نافرمانی

Posted on at


والدین کی نافرمانی


 


حضرت ابوبکرہ رضی الله عنہ سے روایت ہے وہ کہتے ہیں کہ نبئ کریم صل الله علیہ وسلم کا ارشاد ہے کہ


کیا میں تمھیں سب سے بڑا گناہ نہ بتلا دوں ؟ ؟


اس بات کو آپ صل الله علیہ وسلم نے تین مرتبہ فرمایا


کہنے لگے کہ یا رسول خدا ، ضرور فرمائیے


تو حضور پاک صل الله علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ


الله تعالیٰ کے ساتھ شرک کرنا اور والدین کے ساتھ


نافرمانی کرنا


اس وقت حضور صل االله علیہ وسلم تکیہ لگاۓ ہوۓ بیٹھے تھے ، اٹھے اور پھر مزید ارشاد فرمایا کہ


سنو ، جھوٹ بولنا بھی بہت بڑا گناہ ہے


پھر آپ صل الله علیہ وسلم اسے بار بار دہراتے رھے ، میں نے دل میں کہا کہ کاش نبئ اکرم صل الله علیہ وسلم خاموش ھو جایئں


 


حضرت مغیرہ بن شعبہ رضی الله عنہ کے منشی حضرت وراد رضی الله عنہ کہتے ہیں کہ حضرت معاویہ رضی الله عنہ نے ایک مرتبہ حضرت مغیرہ رضی الله عنہ کو لکھا کہ رسول الله صل الله علیہ وسلم کی کوئی بات مجھے لکھ کر بھیجیں . حضرت وراد رضی الله عنہ کہتے ہیں کہ حضرت مغیرہ رضی الله عنہ کے کہنے پر میں نے اپنے ہاتھ سے لکھ کر بھیجا


میں نے حضور اقدس صل الله علیہ وسلم سے سنا تھا کہ آپ


سوالات کی کثرت سے منع فرماتے تھے ، مال کو ضائع کرنے


سے روکتے تھے اور بےفائدہ گفتگو سے منع فرماتے تھے


 


والدین کو لعنت کرنے پر الله تعالیٰ کی لعنت


حضرت ابو الطفیل رضی الله عنہ کہتے ہیں کہ حضرت علی رضی الله عنہ  سے پوچھا گیا کہ نبئ اکرم صل الله علیہ وسلم کی کوئی خاص بات جو انہوں نے صرف آپ سے کی ھو اور کسی سے نہ فرمائی ھو تو آپ رضی الله عنہ نے فرمایا کہ مجھے صرف یہ ارشاد ھوا ہے جو میری تلوار کے میان میں ہے پھر یہاں سے ایک رقعہ نکالا تو اس پر لکھا تھا کہ


الله تعالیٰ اس پر لعنت کرے جو اس کا نام لئے بغیر جانور


کو ذبح کرے ، الله تعالیٰ اسے لعنت کرتا ہے جو زمین کو


قبضہ کرنے کے لئے اسکی نشانی کو چرا لیتا ہے ، الله


تعالیٰ  والدین کو لعنت بھیجنے والے پر لعنت بھیجتا ہے


اور الله تعالیٰ اسے بھی لعنت بھیجتا ہے جو ظالم کی مدد


کرتا ہے اور اسے تحفظ فراہم کرتا ہے


 


حضرت ابوالررا رضی الله عنہ سے روایت ہے کہ رسول الله صل الله علیہ وسلم نے مجھے ٩ چیزوں کی نصیحت کی تھی


اللہ تعالیٰ کا شریک نہ بناؤ خواہ اس سلسلے میں تمھارے ٹکڑے


کیوں نہ کر دیے جائیں یا تم کو جلا دیا جاۓ ، جان بوجھ کے نماز


نہ چھوڑو کیونکہ جو نماز ترک کر دے گا ، میں اسکا زمہ دار


نہ بنوں گا ، شراب نوشی نہ کرنا کیونکہ اس سے ہر برائی جنم


لیتی ہے ، اپنے والدین کی اطاعت کرو اور اگر اس سلسلے میں وہ


تمھیں دنیا سے چلے جانے کا بھی کہہ دیں تو ان کے کہنے پر نکل


جاؤ ، اپنے حکمرانوں سے مت لڑنا اگرچہ تم حق پر ھو ، جنگ کی


بھیڑ میں راہ فرار اختیار کرنا اگرچہ تمھارے دوست فرار ھو جائیں


اور تم ہلاک ھو جاؤ ، جتنا ممکن ھو اپنے اہل و عیال پر خرچ کرو


اور اپنے اہل خانہ پر لاٹھی نہ اٹھاؤ اور انھیں الله تعالیٰ سے ڈراتے


رہنا




اسراف  نظم 


صرف کرنے کی بھی کوئی حد ہے


  صرف بیجا تو عادت بد ہے


اس سے قرآن نے منع فرمایا


  اور پیغمبر نے بھی برا کہا


جس کسی میں بھی یہ برائی ہے


  وہ تو شیطان کا ہی بھائی ہے


اس سے انسان خوار ھوتا ہے


  مفلسی کا شکار ھوتا ہے


خرچ پہلے فضول کر لینا


  پھر اور قرض مانگتے رہنا


اس میں ذلّت ہے اور رسوائی


  صرف بیجا کی یہ سزا پائی


خرچ اچھا جو اعتدال سے ھو


  زیب دیتا ہے یہ مسلماں کو


اے مومنوں ، بچو اس عادت سے


  اس کو دیکھو ہمیشہ نفرت سے


============================================================================================================ 


میرے مزید بلاگز سے استفادہ حاصل کرنے کے لئے میرے لنک کا وزٹ کیجئے


http://www.filmannex.com/NabeelHasan/blog_post 


بلاگ پڑھ کر بز بٹن پر لازمی کلک کیجئے گا


شکریہ ......الله حافظ




بلاگ رائیٹر    


نبیل حسن ٹرانسلیٹر


فلم انیکس    




 


 


 



About the author

RoshanSitara

Its my hobby

Subscribe 0
160