افغان سکولوں اور طلباء کے لئے سکالر شپس اور سوشل میڈیا نصاب

Posted on at

This post is also available in:

افغان ترقی منصوبے کی بدولت آج ہرات، افغانستان میں 5سکولوں میں 20,000 سے زائد بچے اگزامنر تعلیمی سوفٹ وئیرپر رجسٹر کرنے کے قابل ہیں اور اپنی انگریزی ، دری اور پشتو کو بہتر بناسکتے ہیں۔ وہ دوسرے مضامین بھی پڑھ سکتے ہیںجو افغان تعلیمی نظام کا حصہ ہیں۔ ہمارا مقصد اس تعداد کو باقی افغانستان میں بڑھا کر 1000 سکولوں اور 8ملین طلبا ء تک پہچانا۔


طلباء سےکھتے ہیں کہ کس طرح اپنے پیغاموں کو فیس بک، فلم انیکس اور ٹوئٹر جیسے سوشل میڈیا پر ڈالا اور پانا بزر کو بڑھایا جاسکتا ہے۔ اگر طلباء لکھاری یا فلمسازی کی حیثیت سے فلم انیکس سوشل میڈیا نصاب میں شامل ہوتے ہیں تو انھیں اپنے بلاگ ، آرٹیکل ، ویڈیو اور انٹرویو میں شامل کرنے کے لئے خاص کی ورڈ دیے جاتے ہیں۔ جیسے افغانستان میں سکولوں کی تعمیر ، افغانی تعلیم، افغان اقتصادیات وغیرہ۔

 

اگزامنر تعلیمی سوفٹ وئیر فلم انیکس والوں کو بہترین طلباء پہچانے میں اور انھیں سکالر شپ سے نوازنے میں مدد دینا ہے۔ طلباء کو امریکہ ، یورپ اور باقی دنیا کے لکھاریوں کی طرح ان کے بز سکور کی بنیاد پر ادائیگی کی جاتی ہے۔ سکالر شپ والوں کو 300-400 الفاظ کے بلاگ کے لئے 40 ڈالر تک ادا کئے جاتے ہیں۔ فلم اور ویڈیو کے سکالر شپ بزر سکور، ناظرےن کی دلچسپی اور فلم انیکس کی ایڈیٹوریل ٹیم کی بناء پر مختلف ہوتے ہیں۔ یہ عمل طلباء کو فلم انیکس نیٹ ورک کے دوسرے پیشہ ور فلمسازو کے ساتھ فلم انڈسٹری میں قدم رکھنے کے قابل بناتا ہے۔

مزید جاننے کے لئے فلم انیکس کامیابی کی کہانےاں پڑھئے۔ ادائےگےاں USAID اور دی بیٹر دین کیش الائنس'' کی تجویزوں کے مطابق موبائل پےسہ ادائےگی کے نظام کے تحت کی جاتی ہیں۔

فلم انےکس سے شروع ہونے والی نئی اقتصادےات بذریعہ ڈیجیٹل میڈیا اور افغانستان ، وسطی ایشیا اور باقی دنیا کی ٹارگٹ مارکیٹنگ کے لئے افغان طلبہ ایک خزینہ ہیں۔ 

مائک سوینی فلم انیکس کےپیٹل پارٹنرز کا انتظامی پارٹنر اور ٹارگٹ مارکیٹنگ انیکس کا پانی ہے۔ آج کی دنیا میں اثر رسوخ اور فکری قیادت کو پیج رنکنگ ، کی ورڈ کی رینکنگ، بزر سکور، کلاؤٹ سکور، سوشل میڈیا کی پہنچ اور ایسے کئی دوسرے مہذب آلات کے امتزاج سے ناپا جاتا ہے۔ اس عمل کا کچھ حصہ خالصتا حکمت عملی ، عنوانات پر سوچ بچار کرنے، طویل کی ورڈ، کرنے والے منصوبوں ، کا میابی کی تناسب کا حصاب لگانے اور کامیابی حاصل کرنے کے لئے ٹائم لائن پر مشتمل ہے۔ اس طرح ہم افغانستان میں سکولوں کی تعمیر جیسے کی ورڈز کے پیچھے دوڑنے کا فیصلہ کرتے ہیں۔ بلاگ اور ویڈیوز ہر چیز کے پہلے حصے پر آنے کے لے ہمیں 6ہفتے لگے۔ طویل دمداد کی ورڈز افغان اقتصادیات ، اور افغان تعلیم کے لئے ہمیں گوگل ویڈیو سرچ کے پہلے صفحے پر آنے کے لئے 4ہفتے لگے۔

 

کرے کا عمل دوسرا عنصر ہے۔ اس میں پیشہ ورانہ کی فراہمی اور درست کی ورڈ ز کے ساتھ اسے صحیح پلاٹ فارم پر پیش کرانا شامل ہے۔ آرٹیکلز اور بلاگ لکھنا، دوسرے بلاگ لکھنے والے اور لکھاریوں کو متاثر کرنا، شعور پیدا کرنا اور صحیح کی ورڈز اور تصویرات کا استعمال کرنا ہے کہ ہم کی ورڈز کی مشقت حاصل کرسکیں جوہم نے پلان کی تھی۔ فلم اور ویڈیو ز بنانارینکنگ کے لئے بہتریں میٹا ڈیٹا کا استعمال کرنا 

نام میں ٹیگز اور وضاحت صحیح کی ورڈز کا استعمال کرنا یہ سب کر نے میں ہی ہمیں مدد درکار ہے اور ےہ سب ماہر لکھاریوں اور فلم سازوں سے ہونا چاہئے جتنا اچھا رائٹرز جتنا اچھا فلم ساز ، اتنے اچھے نتائج۔

اپنے بہترین کام اور ''پروفیشنل ویڈیو سرج انجن کے طور پر درجہ بندی کی وجہ سے ہم نےٹو NATO ٹی وی میں تعاون سے اور ہم نے ان کے مواد کو فروغ دینا شروع کیا۔ 2011 کے اواخر میں میں نے ہرات میں ایک کاروباری خانوں کے نام سے ایک ویڈیو دےکھی اور رویا محبوب سے ملا جو میری سرپرست بن گئی اور مجھے افغانستان ترقی منصوبہ کے لئے اکسایا۔ رویا محبوب جو اب سٹاڈل نیو یارک کی انتظامی پارٹنر اور افغان سٹاڈل سوفٹ وئیر کپمنی کی 

ماہرین کی ایک ٹیم ترتیب دی۔ 

مہیر فرزان ، فلم ساز

فرشتہ فرح ، رائٹرز


علاجا محبوب: سوفٹ وئیرز ڈویلپرز

مل کر ان سب سے ایک حیران کن ٹیم تشکیل دی جنہوں نے ایک ٹیلنٹ کامیاب منصوبے افغان ترقی منصوبہ کی بنیاد رکھی جو کہ ایک مصدقہ کاروباری نمونہ ہے۔ جیسا کہ آپ میرے تازہ ترین افغان ترقی منصوبہ اور فلم انیکس کاروباری نمونہ اور تازہ ترین میں پڑھ سکتے ہیں۔

فرشہ فرخ اور غلابا بے اگزامنر تعلیمی سوفٹ کے بار میں سوچا اور اسے تشکیل دیا جو ہمیں ہزاروں طلباء کو ورلڈ وائڈ ویب سے جوڑنے کا موقع دیتا ہے۔ میرا تازہ ترین آرٹیکل افغان اقتصادیات ، انسانی حقوق حکومت اور قیادت میں عورتوں کی خود مختاری پڑھئے۔ 

ہم افغان طلباء کے لئے نصیبہ اپنے ہی تصور کی نقل کر رہے ہیں۔ ہم بہترین طلباء اور فلمسازوں کا انتخاب کرتے ہیں۔ جو خیالات کی وضاحت ، حکمت عملی طے اور قیادت سنبھال سکتے ہیں۔ اور اسطرح ہم واپس بلاگ کے شروع مےں پہنچ جاتے ہےں جہاں میں نے ذکر کیا تھا


About the author

zakertanha

Zaker was born in Kabul Afghanistan on Thursday 02/21 AM 1992/06/09. he attended to Habibia high school. for studding knowledge. when war start in Afghanistan he went to Pakistan with his family. he studied computer programs and English language at kout institute in Pakistan. also he attended to TEAKWONDO club…

Subscribe 108
160