روزہ

Posted on at


 روزہ اسلامی تعلیمات کا بنیادی رکن ہے -بارہ سال سے کم عمر بچے ،بیمار ،مسافر ،اور وو عورتیں جو ماہواری میں مبتلا ہوں یا بچوں کو دودھ پلا رہی ہوں .ان کو روزہ میں رایت حاصل ہے ،روزہ کے دوران نہ صرف کھانے پینے سے بچا جاتا ہے ،تمباکو نوشی ظلم و زیادتی اور ہر قسم کے جھوٹ سے بی بچا جاتا ہے ،اس ماہ میں چوتھے بڑے سب عبادت میں بھر چھڑ کر حصہ لیتے ہیں فرضوں کے علاوہ نفلی عبادت بی ذوق و شوک سے کرتے ہیں                                                                                   پورے ایک سال میں رمضان کا ایک مہینہ خیرو برکت والا ہوتا ہے رمضان ال مبارک میں جھوٹ سے بچیں اور اپنی خھسیحات اور جذبات کو ان حدود اندر رکھا جاے جو متین کی گی ہیں ،نفس کی جن کھہیشوں کو جس وقت جس حد تک اور جس تارہا الله نے اجازت دی ہے ،انہی کے اندر رہ کر ان کی تکمیل کی کوشش کرنی چایی ،رمضان ال مبارک کے روزے فرض کرنے کا مقصد یہی ہے،کے انسانو کے اندر تقویٰ پیدا ہو.                                                                                                                                                                                                       تقویٰ ایک اسا لفظ ہے جس کے مینی بوہت وصی ہیں .تقویٰ کے مینی پرہیز گاری ہیں .تقویٰ دل کی قیفیت کا دوسرا نام ہے .جو الله کے حاضر و ناظر ہونے کا یقین پیدا کر کے نیکی اور برائی میں فرق کرنے کی صلاحیت پیدا کرتا ہے ،نیکی کی طرف رحبت اور بورائی سے نفرت کا جذبہ پیدا کرتا ہے ،ارشاد ای باری تعالیٰ ہے اے امان والوتم پر روزے فرض کیے گئے ہیں جیسے کے تم سے پہلے لوگوں پر فرض کئے گئے تھےرمضان ال مبارک کے روزوں کا احترم یہی ہے کے نہ صرف روزہ رکھا جی بلکے ہر اس کام سے بچا جی جو برا ہے 



About the author

abid-khan

I am Abid Khan. I am currently studying at 11th Grade and I love to make short movies and write blogs. Subscribe me to see more from me.

Subscribe 8673
160