کنٹیمپریری ارٹس سنٹر نیو اورلینز پر The Art of Court 13- جنوبی جنگل کے قابل نفرت لوگ

Posted on at

This post is also available in:

اخری ہفتے بیانڈ"بیسٹس" کے کھولنے پر جانے کیلۓ نیو اولینز کے سیر نے 4 دن لے لیں۔ جوکہ شہرکے کنٹیمپریری ارٹ سنٹر پر دی ارٹ اف کورٹ 13 ہے۔ ائیرپورٹ سے عجائب گھر تک میری گاڑی کا ڈرائیور 20 منٹ کیلۓ میری سیر کا ایک کافی جھوٹے قسم کا نمائندہ ظاہر ہوتا تھا۔ میں نیو اورلینز کے بارے میں نہیں جانتا اور یہ بھی نہیں جانتا کہ کیا اُمید کرو۔ سیروسیاحت کے اخر میں میں چھوڑنا نہیں چاہتا تھا۔ صاف طور پر یہ زیادہ جادوئی جگہوں میں سے ایک ہے جوکہ میں نے دیکھیں ہیں۔ یہ ایک ایسی جگہ ہے جو اپنے حقیقی شکل میں موجود ہو جہاں لوگ تفریحی، احتیاطی اور مخلص دیکھتے ہیں۔ کم سے کم وہ میرا پہلا نقش تھا۔ مجھے زیادہ پانے کیلۓ واپس جانا ہوگا۔

 بعد میں جب جمعہ رات کو میں عجارئب گھر پہنچا تو فن کاران جو نمائش میں شریک تھے وہ انے والے شام کے نمائش کیلۓ تیاری کررہے تھیں۔ وہ شو جو 16 جون سے چل رہی ہے وہ کورٹ 13 کے کام کے خصوصیات کو دیکھاتی ہے، فلم اجتماعی جنوبی وحشی کے اوسکار نامزدہ فلم بیسٹس کے پیچھے ہے۔ جگہ کے دیواریں فلم کے ساتھ ساتھ حوالوں سے لیے گۓ عکسی تصویروں سے ڈھانپے دیۓ گۓ تھے جوکہ کہانی کو الھامی کرتی ہے۔ اب بھی کٹائی، لٹکائی اور رنگ سازی جاری تھے لیکن اس میں کوئی شک نہیں تھا کہ تمام تیاریاں اگلے دن ختم ہوجائینگے۔

پال کورزن(رہنما فن کار) اور رے ٹینٹوری (یونٹ ڈائریکٹر) کام پر- اوروچس اور خاص اثرات کے یونٹ

شو پر اصلی فنی کام اور جائزاتی ٹکڑوں نے دکھانے والوں کو مناظر کے پیچھے جانے کا اجازت دیا ہے تاکہ سہاروں، نمونوں، جانوروں اور فلم میں استعمال کیا ہوا بت تراشوں کو دیکھیں۔ ہاتھوں کے بنے ہوۓ لکڑی کے نشانات، جانورکے تصاویر، اوروچ لباس اور ہاتھ کے ٹکڑے جوکہ خنزیر نے پہنے تھے اور تُرک، وینک کے مشہور ٹرک کشتی تمام خوبصورتی سے دکھاۓ گۓ تھے۔ نمونہ تمام فن کاروں کے قابلیت اور فیشن کا وصیت نامہ تھی جنہوں نے فلم پر کام کیا ہے جیسا کہ یہ سوتھرن ویلڈ کے بیسٹس میں ہمیشہ موجود پھولوں کے خوشبو کو دوبارہ تخلیق کرتا ہے۔

سینیک ڈائریکٹر زیڈ بیہل شو ست چند گھنٹے پہلے تیار ہورہا ہے۔

تمام کمرے میں ایل سی ڈی کے پردے رکھے گۓ تھے جو ویڈیو کے بناوٹ، انٹریویوز اور اڈیشن ٹیپس کو دکھا رہے تھے۔ فلم کے تخلیق ہر خاصیت انے والوں کے دیکھنے کیلۓ تھا۔ اِسے دیکھنا جوشی دلانے والا تھا کہ کسطرح اداکاروں کو ہدایات دی جاتے تھے کسطرح مناظر کو شوٹ کرتے تھے اور کسطرح سیٹیں بناتے تھے۔ اُس عمر میں جہاں ان لائن ویڈیو بہت زبردست ہوتی ہے۔ ایک خوبصورت عمارت کے اندر یہ تمام ارام دینے کے باعث تھے۔

 فلموں کے  پروڈیوسروں اور خاص اثرات کے فن کاروں کے ساتھ ملاقاتیں جلد ہی فلم انیکس پر نمائیاں ہونے والے ہیں۔ اِسی اثنا میں اگر آپ نیو اورلین کے قریب ہو تو اِس حیران کن نمائش کو دیکھو! اگر آپ نیو اورلین کے قریب نہیں ہو تو پھر بھی دیکھنے چلے جائیں اگرچہ اِس کیلۓ تین گھنٹے جہاز سے جانا کیوں نا پڑے۔

سوتھرن ویلڈ کے بیسٹس کا ڈائریکٹر بینھ زیٹلین کا شو سے پہلۓ اخری لمحے کا تیاری کررہا ہے۔

 حصہ لینے والے فن کار شامل کیے ہیں:

Alana Pryor Ackerman، زیڈ بہل، ایلیکس ڈی گرلینڈو، کرکیٹ ڈوب، جوش اینٹی، مرڈیتھ گروز، ناتھان حریسن، مائی اراکیڈا ایزساک، پال کورزن، ایمیلا میلو، جیس پینخم، فے ٹینٹوری، سوفی ٹینٹوری، بینھ زیٹلین اور ایلیزا زیٹلین دوسروں کے درمیان۔

 یہ شو کورٹ 13 کے پہلے فلموں اور اُن کے تخلیق سے متعلق مواد کے خصوصیات کو بھی دکھاتی ہے۔ رے ٹینٹوری کے سنڈینس فلم تہور ٹنمان (2007) کے مختصر ڈیتھ فلم جیت رہے ہیں جو بالکل چت سے ٹنمان لباس لٹک سے پہلۓ دکھائیں گۓ تھے۔

ایرین۔  ۔ ۔



About the author

AFSalehi

A F Salehi graduated from Political Science department of International Relation Kateb University Kabul Afghanistan and has about more than 8 years of experience working in UN projects and Other International Organization Currently He is preparing for Master degree in one Swedish University.

Subscribe 200
160