دین اسلام ایک مکمل ضابطہ حیات ہے

Posted on at


 

ہمارا دین اسلام ہر زمان ومکان کے ہر جن و انس کے لیے مکمل دستور حیات ہےجو زندگی کے تمام معاملات میں انسان کو اچھائی اور برائی ، نیکی و بدی اور حقوق فرائض کا شعور بخشتے ہوئے امن وسلامتی اور انسانی ترقی کی ضمانت فراہم کرتا اور ظاہری وباطنی نعمتوں کی تکمیل کرتا ہے توحیدخالص اسکی بنیاد پر ہے اور اخلاق حسنہ اس کی پہچان یہ رنگ نسل ، ذات برادری طاقت و دولت حسب ونسب اور شاہ و ایاز کی بنیاد پر امتیازات کرنے کا قائل ہے نہ اس کے نتیجے میں کسی مرد کا متمنی یہ تو انسان کی فطری نشونما اور اللہ تعالی سے عبد ومعبود کے خالص تعلق کو قائم و مضبوط کرتا ہے اور اسلام ہمیں تقوی کا درس دیتا ہے

 

اسلام ہمیں وفا شعاری ، امانت دیانت ، مروت ،حیا و شرافت پاکیزگی اور اچھے اخلاق کا درس دیتا ہے اللہ تعالی کا حکم ہے کہ مسلمان مرد اور عورتیں اپنی نگاہ نیچی رکھیں یا واگوئی اور مذاق سے پرہیز کریں  کوئی مسلمان دوسرے مسلمان بھائی پر عیب لگائے نہ تہمت ہم مسلمانوں کی تعمیر و ترقی صرف اسی صورت ممکن ہے جب اسکی بنیاد اسلام کے آفاقی اصولوں پر ہو ہمارا دین اسلام یاک ایسا مذہب ہے جس کی بنیاد توحید خالص ہے دین اسلام دیگر مذاہب کی طرح شخصی یا علاقائی مذہب نہیں

 

اسلام ایک اعلی تہذیب ، ایک وسیع ثقافت اور مخصوص معاشرتی اوصاف کا حامل ہے جس مین رنگ و نسل ، شکل وصورت ، رسم ورواج اور زبان و مکان جیسے خدوخال ثانوی حیثیت رکھتے ہیں تاہم مذہبی عقائد ، اخلاقی معیار اور روحانی اقدار کی حیثیت بنیادی ہے  جن کا مرکزی نقطہ عقیدہ توحید ہے  یہی فرق اسلام کو دوسری تہذیبوں سے ممتاز کرتا ہے قرآن کرم میں ارشاد ہے ترجمہ’’ اللہ تعالی کے نزدیک دین صرف اسلام ہے‘‘ ایک اور جگہ ارشاد ہے’’ جو شخص اسلام کے سوا کسی اور دین کا طالب ہو گا اسے ہر گز قبول نہیں کی جائیگا ایسا شخص آخرات میں نقصان اٹھانے والا ہو گا‘‘

ہم کو مسلمان ہونے پر فخر ہونا چاہیے کہ یہ اللہ تعالی کا ہم پر بہت بڑا احسان ہے  اس نے ہمیں اپنی بندگی کے لیے چنا راستہ اپناو تو انعام یافتہ لوگوں کا یعنی دین اسلام کا راستہ۔

 



About the author

sss-khan

my name is sss khan

Subscribe 1674
160