ڈریوکرسٹی کے ساتھ کویسشنینگ اوریجنلٹی ویکی ترس ڈے کا سب سے زیادہ ضیافت والی فلمیں

Posted on at

This post is also available in:

ایک آدمی فلمیں دیکھنے جاتا ہے اور ٹکٹ بوتھ پر لڑکے سے پوچھتا ہے کہ کیا ہالی ووڈ نے ایک allergy to originality وضع کیا ہے۔ ابتداء میں اوازیں مذاق کیطرح ہیں ہے نا ؟  یہ اس لۓ کہ Drew Christie کے اعلیٰ دلچسپ، خودبینی کے عادی، اور تخلیقی متحرک فلمیں شروع ہوجاتےہیں۔ اور ہاں، یہ تمام اصلیت کے بارے میں ہیں۔

 حال ہی میں، میں اس کے بارے میں سوچ رہا ہوں کہ کیوں میں نے فلموں میں جانا بند کر دیاہے۔ میں جب بچہ تھا تو میرے باپ ہر اتوار کو مجھے فلموں کے لئے لےجاتے تھے۔ مجھے یاد ہے کہ میں نے Crucible اور Evita کو ایک دوپہرفلم سے واپس جاتے دیکھا تھا۔ کیا یہ ایک دل میں اُتر جانی والے تھیں ! (اگرچہ یہ اوازیں ابھی بہت بورنگ لگتی ہے).

 جب میں پہلے بار نیو یارک منتقل ہوگیا تو میں اکثر فلموں میں جاتاتھا۔ میری پرورش کچھ اسطرح ہوا کہ مجھے Angelika اور Cinema Village کیطرح فلم تھیٹر تک رسائی تھی۔  لیکن پھر میں نے آہستہ آہستہ جانا بند کر دیاہے۔ Cobble Hill ، Brooklyn کے  قریب ایک پرانی فلم تھیٹر ہے جہاں میں رہا،  جوبالی وڈ کے تصوراتی مرکب اور ارٹ ہاوس فلموں کو دکھاتا ہے۔ لیکن حقیقت یہ ہے کہ وہ بنیادی طور پر سٹوڈیو فلمیں ہیں اور میں ان میں سے کسی کو دیکھنے میں دلچسپ نہیں ہوں۔  Drew Christie کی فلم میں moviegoer کیطرح ٹکٹ مین کو کہتے ہے کہ یہ تمام فلمیں یا تو sequels یا prequels ،موافقت، spin-offs وغیرہ ہیں۔

 

ایک طرف میں محسوس کرتا ہوں کہ میں مسلسل اصل چیزوں کو دیکھ رہا ہوں یہ جاننے بغیر کہ اصل کا مطلب کیا ہے۔  دوسری طرف میں اس حقیقت کو خرید رہا ہوں کہ لوگ حقیقت کو سننا یا دیکھنا نہیں چاہتے کیونکہ وہ کیا استعمال کرتے ہیں جو وہ استعمال کرنا چاہتے ہیں اورکوئی بھی چیز اصل میں واقعی موجود نہیں ہوتا۔ اگرچہ میرے مطابق اصلیت کا مطلب یہ نہیں کہ میں نے کوئی چیزنہ دیکھا نہ سنا یا اس پر پہلے تجربہ نہیں کی بلکہ کچھ چیزیں جواحساس کے یاد کو تازہ کرتے ہیں، میں نے اکثر محسوس نہیں کیا یا میں نے پہلے اِن پرغور نہیں کیا ہے۔ اس لحاظ سے دنیا میرے لئے اصلیت سے بھری ہے لیکن میں اس دنیا کے باہر سب سے زیادہ حصہ ہالی ووڈ کے لئے رکھ رہا ہوں۔

 

Drew Christie کے Allergy to Originality میں اصلیت کے متعلق بہت مباحثہ ہے اِس موضوع پر کہ اصلیت ہے کیا، اورفن کے تاریخ اصلیت کی حقیقت کو کسطرح ظاہر کرتاہے۔ جسطرح ہم حقیقت کے بارے میں سوچھتے ہیں وہ اصل میں موجود نہیں ہے جو اس ہفتے کے WACKY TUESDAYS پرنمائش کیلۓ پیش کیا جاۓ گا۔ فلم کے ڈائیلاگ بالکل دلکش ہے۔ کوئی حیرانگی کی بات نہیں ہے کیونکہ کرسٹی نے یہ فلم Op-ed section، غصہ دلانے والا سوچ، سمارٹ اور فننے New York Times کیلۓ بنایا ہے ۔

 

نیچھے ویڈیوکو دیکھیں۔

ٹیون اگلے ہفتے میں فلم انیکس پر زیادہ ویکنیس کیلۓ آن لائن تقسیم کے پلیٹ فارم.

 

اس وقت تک

Eren



About the author

AFSalehi

A F Salehi graduated from Political Science department of International Relation Kateb University Kabul Afghanistan and has about more than 8 years of experience working in UN projects and Other International Organization Currently He is preparing for Master degree in one Swedish University.

Subscribe 202
160